پاکستان بھارت پرحملے سے گریز کرے ، نئے بھارتی آرمی چیف کی دھمکی

نئی دہلی(ثناء نیوز)نئے بھارتی آرمی چیف نے پاکستان کو دھمکی دی ہے کہ وہ مستقبل میں بھارت پر حملے سے گریز کرے ۔ جنرل دلبیر سنگھ سہاگ کا کہنا تھا کہ پاکستان اگر مستقبل میں اس پر حملہ کرے گا تو اس کا فوری جواب دیا جائے گا ۔ بھارتی چیف کی یہ گیڈر بھبھکیاں بھارتی فوج پر عوامی تنقید کے بعد سامنے آرہی ہیں ،کیونکہ بھارتی فوج کے افسران کو کرپشن کے سنگین الزامات کا سامنا ہے، جنرل دلبیر سنگھ سہاگ ڈھائی سال آرمی چیف کے عہدے پر فائز رہیں گے بھارتی آرمی چیف نے پاکستان کی جانب سے مبینہ طور پر ہندوستانی فوجیوں کو قتل کیے جانے کے واقعات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان کی جانب سے کسی بھی اشتعال انگیزی کا سخت جواب دیاجائے گا۔نئے ہندوستانی آرمی چیف گارڈ آف آنر کی تقریب کے دوران میڈیا کے نمائندوں سے خطاب کرتے ہوئے 8 جنوری 2013 کو پاکستان کی جانب سے لائن آف کنٹرول پر پونچھ سیکٹر میں ایک ہندوستانی فوجی لانس نائیک ہیمراج کا سر قلم کیے جانے کے واقعے کا حوالہ دے رہے تھے۔اس سوال کے جواب میں کہ ہندوستانی سپاہی کا سر قلم کیے جانے کا بدلہ پاکستان سے کس طرح لیا جائے گا، جنرل دلبیر سنگھ نے وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ اس سلسلے میں کام کیا جا چکا ہے۔ جب ہم طاقت کا استعمال کرتے ہیں تو اس سے مراد تکنیکی، آپریشنل اور پھر حکمت عملی کی سطح پر ہوتا ہے۔یاد رہے کہ انڈیا نے اپنے سپاہی ہیمراج کا سر قلم کرنے اور لارنس نائیک سدھاکار سنگھ کی لاش کی بے حرمتی کا الزام پاکستان کی اسپیشل فورسز پر لگایا تھا۔واضح رہے کہ 2013 سے پاکستان اور بھارت کے درمیان سرحدی خلاف ورزیوں پر کشیدگی جا ری ہے۔انڈیا نے الزام لگایا تھا کہ پاکستانی فوجیوں کی فائرنگ کے نتیجے میں لائن آف کنٹرول کے قریب اس کے دو فوجی ہلاک ہو گئے تھے، جن میں سے ایک کا سر قلم کر دیا گیا تھا۔جبکہ پاکستان کی جانب سے بارہا اس الزام کی تردید کرتے ہوئے موقف اختیار کیا جاتا رہا ہے کہ ہمیشہ ہندوستان کی جانب سے لائن آف کنٹرول کی خلاف ورزی کی گئی ہے اور لائن آف کنٹرول کی خلاف ورزی کے بعد انڈین فوج کی فائرنگ سے ایک پاکستانی فوجی کی ہلاکت اور ایک کے زخمی ہونے کے واقعے پر پردہ ڈالنے کیلیے ہندوستان کی جانب سے پروپیگنڈا کیا جا رہا ہے۔shj/ILY

Archives